ماضی کی کچھ یادیں اور کچھ باتیں۔

جس وقت میں یہ مقالہ لکھ رہا تھا، تو میری کیفیت یہ تھی کہ میں مسلسل رو رہا تھا۔ کافی کوشش کرنے کے باوجود میں اپںے اوپر کنٹرول نہیں کر پارہا تھا۔ اللہ تعالی میری اس بات کو پڑہنے والوں کی دلوں اتار دے۔ تاکہ وہ اپنے والدین اور دادا اور دادی، اسکے علاوہ قریبی رشتداروں کے ساتھ حس سلوک والا معاملہ فرمائیں، اور انکی قدر کریں۔ آمین
  • مضامین کے اعداد شمار:
  • کل مضامین : 10
  • مشاہدات : 3995

کیا آپ لکھاری ہیں؟

اپنی مفید ومثبت تحریریں ہمیں ارسال کیجئے

یہاں سے ارسال کیجئے

ویب سائٹ کا مضمون نگار کی رائے سے متفق ہونا ضروری نہیں، اس سائٹ کے مضامین تجارتی مقاصد کے لئے نقل کرنا یا چھاپنا ممنوع ہے، البتہ غیر تجارتی مقاصد کے لیئے ویب سائٹ کا حوالہ دے کر نشر کرنے کی اجازت ہے.
ویب سائٹ میں شامل مواد کے حقوق Creative Commons license CC-BY-NC کے تحت محفوظ ہیں
شبکۃ المدارس الاسلامیۃ 2010 - 2019