چیزوں کو انکے مقام پر رکھیں

      جتنا ہم لوگوں کو قائل کرتے ہیں اتنا اپنے اللہ کو قائل کرلیں تمام الجھنیں سلجھ جائیں گی 
جتنا ہم لوگوں سے امید رکھتے ہیں اتنی اپنے اللہ سے رکھیں تو کبھی مایوسی کا سامنا نہیں کرنا پڑے گا
جتنی پرواہ ہمیں لوگوں کی ناراضگی اور لوگوں کی باتوں کی ہوتی ہے اتنی پرواہ اللہ اور رسولﷺ کے  احکامات کی کر لیں زندگی سنورتی چلی جائیں گی 
جتنا ڈر لوگوں سے ہے اتنا اپنے اللہ سے ڈریں تو ہر قدم پر اللہ کا ساتھ پا لیں گے 
آج ہمارے دل کیوں ویران ہیں ہر سکون دینے والی اشیاء موجود ہے لیکن سکون نہیں ہے کیونکہ ہم چیزوں کو انکی اصل جگہ پر نہیں رکھا ہوا ڈر,خوف,پرواہ ,امید یہ سب اللہ رب العزت سے رکھنا چاہیئے لیکن ہم نے چیزوں کو انکے مقام سے ہٹا دیا ہے ہر چیز اپنی جگہ پر اچھی لگتی ہے اگر ہم مچھلی کو پانی سے نکال دیں اور جتنے بھی پانی میں رہنے والے جانور ہیں سب کو خشکی میں رکھیں اور خشکی والے پانی میں چھوڑ دیں تو پوری دنیا کا نظام خراب اور عجیب ہوجائے گا اسی طرح جن چیزوں کا مالک اور جن چیزوں پر رب کائنات کا حق ہے ہم وہ کسی اور کو دے دیں تو یہ کیسے ممکن ہے ہمارے تمام کام بہترین ہونگے اس لئے عزت سب کی کریں محبت سب سے رکھیں لیکن اللہ پر کسی کو فوقیت نہیں دیں ورنہ اللہ رب العزت اتنا الجھا دینگے کہ سلجھنے تک ہماری سانسوں کی ڈور الجھ جائے گی 

دعا عقیل احمد

طالبہ درجہ اولی
دعا عقیل احمد
طالبہ درجہ اولی
میرپورخاص سندھ

کل مواد : 2
شبکۃ المدارس الاسلامیۃ 2010 - 2024

تبصرے

يجب أن تكون عضوا لدينا لتتمكن من التعليق

إنشاء حساب

يستغرق التسجيل بضع ثوان فقط

سجل حسابا جديدا

تسجيل الدخول

تملك حسابا مسجّلا بالفعل؟

سجل دخولك الآن

آپ بھی لکھئے

اپنی مفید ومثبت تحریریں ہمیں ارسال کیجئے

یہاں سے ارسال کیجئے

ویب سائٹ کا مضمون نگار کی رائے سے متفق ہونا ضروری نہیں، اس سائٹ کے مضامین تجارتی مقاصد کے لئے نقل کرنا یا چھاپنا ممنوع ہے، البتہ غیر تجارتی مقاصد کے لیئے ویب سائٹ کا حوالہ دے کر نشر کرنے کی اجازت ہے.
ویب سائٹ میں شامل مواد کے حقوق Creative Commons license CC-BY-NC کے تحت محفوظ ہیں
شبکۃ المدارس الاسلامیۃ 2010 - 2024