اہل بیت اور علمائے اہل سنت کی تصنیفی خدمات

آج یوم عاشور ہے ،سید الشہداء حضرت امام حسین رضی اللہ عنہ تعالی اور دیگر شہدائے کربلا کو عالمِ اسلام میں مختلف طریقوں سے خراج عقیدت پیش کیا جارہا ہے،اہل سنت و الجماعت اہل بیت کے حقیقی وارث ہیں ،کیونکہ اہل سنت نے حب اہل بیت کی بنیاد کسی برگزیدہ ہستی کے بغض و عناد پر نہیں رکھی  ،نیز اہل بیت کے حق میں غلو مفرط سے کام لیا  نہ  تقصیر و تفریط  سے ،(خود کو سنی کہلانے والے ان حضرات کے لئے یہ لمحہ فکریہ ہے  جو حب اہل بیت کی آڑ میں اصحاب جمل و صفین کی تنقیص کرتے ہیں یا حب صحابہ کی آڑ میں اہل بیت کی تنقیص کرتے ہیں ،منہج اہل سنت و الجماعت ہر دو طبقات سے بری ہے )ذیل میں یوم عاشور کی مناسبت سے ان کتب کی ایک فہرست (الف بائی ترتیب سے )دی جارہی ہے ،جو مختلف زمانوں میں علمائے اہل سنت نے اہل بیت کی شان ،تقدیس ،تعظیم ،تعریف اور سیرت و تراجم میں لکھے ہیں ۔الھم صل علی محمد و علی آل محمد 
1۔اتحاف الناس بفضل و ابن عباس ،ملا علی قاری 
2۔احیاء المیت فی فضائل اہل البیت ،حافظ جلا ل الدین السیوطی 
3۔احیاء المیت بمناقب اہل البیت ،علامہ صدیق حسن خان 
4۔اخبار آل ابی طالب ،ابو بکر محمد بن عمر البغدادی 
5۔اخبار علی بن الحسین ،ابو بکر محمد بن عمر البغدادی 
6۔اربعون حدیثا فی فضائل اہل البیت ،یوسف النبھانی 
7۔اربعون حدیثا فی فضل علی ،یوسف النبھانی 
8۔الاربعون المنتقی فی مناقب المرتضی ،احمد بن اسماعیل القزوینی 
9۔الاربعون فی فضائل العباس ،حافظ حمزہ بن یوسف السہمی 
10۔الاربعون فی فضل الزہراء ،حافظ ابو صالح النیسابوری 
11۔الاربعون فی فضل علی ،حافظ ابو الخیر الطالقانی 
12۔ازواج النبی ،امام زبیر بن بکار 
13۔الاساس فی فضل بنی العباس ،امام سیوطی 
14۔استجلاب ارتقا بحب اقرباء الرسول و ذوی الشرف ،علامہ سخآوی 
15۔اسعاف الراغبین فی سیر المصطفی و فضائل اہل بیتہ الطاہرین ،محمد علی الصبان مصری 
16۔الاسعاف بالجواب عن مسالۃ الاشراف ،علامہ سخآوی 
17۔اسنی المطالب فی مناقب علی بن ابی طالب ،محمد بن علی الجزری 
18۔الاشراف علی مناقب الاشراف ،حسن بن عتیق القسطلانی 
19۔الافلاذ الزبرجدیہ فی مدح العترۃ الاحمدیہ ،عبد الحمید الطرابلسی
20۔امہات المومنین ،امام محمد بن حبیب 
21۔الانباء المستطابہ فی مناقب الصحابہ و القرابۃ ،ابو القاسم القفطی 
22۔الانتصار لال النبی المختار ،ابو المکارم الکتانی 
23۔الانجم الزاہرہ فی الذریۃ الطاہرہ ،ابو عبد اللہ محمد التہامی 
24۔الانفاس القدسیہ فی بعض المناقب العباسیہ ابو السیادۃ عبد اللہ بن ابراہیم الحنفی 
25۔انوار الیقین فی فضائل امیر المومنین ،سید حسن بن بدر الدین 
26۔الایناس بناقب العباس ،علامی سخاوی ،اسی نام حافظ ابن حجر اور علی بن ساعی کی تصنیف ہے ۔
27۔البدور الزواہر فیما للمختار و عترتۃ  من لمفاخر ،حافظ محمد بن محمد الہاشمی المکی 
28۔تاج الحسن الباہر فی اہل النسب الطاہر ،محمد بن القاسم 
29۔تحفۃ ذوی الالباب فیما یتعلق بالال و الاصحاب احمد بن احمد السجاعی 
30۔الغور الباسمی فی مناقب السیدۃ فاطمہ ،علامہ سیوطی 
31۔ثناء الصحابہ علی القرابہ و ثناء القرابہ علی الصحابہ ،امام دار قطنی 
32۔جواہر العقدین فی فضل الشرفین ،شرف العلم الجلی و النسب النبوی ،شریف نور الدین علی بن عبد اللہ السمہودی 
33۔الجوہر الشفاف فی فضائل الاشراف ،شریف نور الدین بن علی السمہودی 
34۔جواہر العقول فی ذکر آل الرسول ،عبد الرحمان بن عبد القادر الفاسی 
35۔حسن المال فی مناقب الال ،شیخ احمد بن الفضل الشافعی 
36۔در السحابہ فی مناقب القرابۃ و الصحابہ ،قاضی شوکانی 
37۔الدرۃ الیتیمۃ فی فضائل السیدۃ العظیمہ فاطمہ بنت الرسول ،عبد اللہ بن ابراہیم الحنفی 
38۔ ذخآئر العقبی فی مناقب ذوی القربی ،ابو العباس محب الطربی 
39۔الذریۃ الطاہرۃ النبویۃ حافظ ابو بشر الدولابی
40 ۔رد العقول الطائشہ فیما اختصت بہ خدیجۃ و عائشہ ،عبد القادر الشاذلی
41۔رسالہ فضل اہل البیت و حقوقہم ،ابن تیمیہ 
42۔رسالہ فی اولاد النبی ،ملا علی قاری 
43۔زبدۃ المقال فی فضائل الاصحاب و الال ،کمال الدین النصیبینی 
44۔السول فی فضائل بیت الرسول ،ادریس بن علی الیمنی 
45۔الشرف الموبد لال محمد ،یوسف بن اسماعیل النبھانی 
46۔الصفوۃ بمناقب ال البیت النبوۃ ،عبد الروف المناوی 
47۔العذب الزلال فی مناقب الال ،زین الدین عمر الشافعی 
48۔عقد اللال بفضائل الال ،شیخ محی الدین الحضرمی 
49۔فتح المطالب فی مناقب علی بن ابی طالب ،علامہ ذہبی 
50۔الفتح و التیسیر فیما جب لالہ من التقوقیر ،ابو عبد اللہ محمد القادری الحسنی 
52۔فتح الوہاب فی فضائل الال و الاصحاب ،عبد الوہاب الشعرانی 
53۔فضائل اہل البیت ،عبد الرحمان ابن ابی حاتم الرازی 
54۔فضائل بنی ہاشم ،ابو الحسن البزاز
55۔ فضائل جعفر بن ابی طالب ،ابو الحسن علی بن محمد المدائنی 
56۔فضائل الحسن و الحسین ،اما م احمد بن حنبل 
57۔فضائل العترۃ النبویہ ،عبد اللہ بن عبد الہادی 
58۔فضائل علی بن ابی طالب ،ابن عساکر 
59۔فضائل علی بن ابی طالب ،ابن ابی دنیا 
60 ۔فضائل فاطمۃ الزہراء ،ابن شاہین 
61۔فضائل فاطمۃ الزہراء ،حاکم نیشابوری 
62۔فضل قریش و اہل البیت و الانصار الاشعریین ،ابن عساکر 
63۔الفوائد الزاہرۃ فی السلالۃ الطاہرۃ ،زین الدین عمر الشافعی 
64۔القول الجلی فی فضائل علی ،علامہ سیوطی 
65 ۔کتاب الاربعین فی مناقب امہات ابن عساکر 
66۔خصائص امیر المومنین علی بن ابی طالب ،امام نسائی 
67۔مجلس فی مناقب الزہراء ،علامہ سیوطی 
68۔مطالب السول فی مناقب ال الرسول ،کمال الدین الشافعی 
69۔معالم العترۃ النبویہ ،عبد العزیز البغدادی 
70۔معرفۃ ما یجب لام البیت النبوی من الحق علی من عداہم ،احمد المقریزی 
71۔مناقب اہل البیت ،محی الدین ابن عربی 
72۔مناقب علی ،ابو الحسن الواسطی المالکی 
73۔مناقب علی ،ابن جوزی 
74۔مناقب علی بن ابی طالب ،الخوارزمی 
75۔مواہب الکریم فی حال ابن النبی ابراہیم ،شمس الدین الصالحی 
76۔النبراس فی فضائل العباس ،امام محمد  بن احمد القسطلانی 
77۔ نزل الابرار بما صح من مناقب اہل البیت الاطہار ،شیخ محمد بن معتمد خان البدخشانی 
78۔نشر القلب المیت بنشر فضل اہل البیت ،یوسف بن محمد العبادی 
79۔نصح الخاص و العام فیما یجب لا ل النبی علیہ السلام ،ابوعبد اللہ محمد بن المدنی 
80۔نصح ملوک الاسلام بالتعریف بما یجب علیہم من حقوق اہل البیت الکرام ،ابو عبد اللہ محمد بن ابی غالب السکاک 
81۔نصرۃ العترۃ الطاہرۃ من ابناء علی و فاطمہ الزہراء،ابو عبد اللہ محمد بن احمد الکتانی 
82۔نہایۃ الافضال فی تشریف الال ،ابو الحسن محمد بن محمد البکری 
83۔نو رالابصار فی مناقب ال البیت النبی المختار ،سید مومن بن حسن الشبلنجی 
84۔وسیلۃ المال بذکر فضائل الال ،شیخ احمد بن الفضل المکی اکشافعی 
85۔وصلۃ الزلفی فی التعریف بال المصطفی ،ابو العباس احمد بن علی السوسی 
ان کتب میں بہت سی کتب  کا ذکر نہیں ہے ،نیز معاصرین کی کتب کا بھی ان میں ذکر نہیں ہے ۔
(بحوالہ دراسات فی اہل البیت النبوی ،خالد بن احمد الصمی ،مکتبۃ الاسدی ،مکہ المکرمہ )

شبکۃ المدارس الاسلامیۃ 2010 - 2024

تبصرے

يجب أن تكون عضوا لدينا لتتمكن من التعليق

إنشاء حساب

يستغرق التسجيل بضع ثوان فقط

سجل حسابا جديدا

تسجيل الدخول

تملك حسابا مسجّلا بالفعل؟

سجل دخولك الآن
متعلقہ الفاظ
  • #کتب نما
  • آپ بھی لکھئے

    اپنی مفید ومثبت تحریریں ہمیں ارسال کیجئے

    یہاں سے ارسال کیجئے

    ویب سائٹ کا مضمون نگار کی رائے سے متفق ہونا ضروری نہیں، اس سائٹ کے مضامین تجارتی مقاصد کے لئے نقل کرنا یا چھاپنا ممنوع ہے، البتہ غیر تجارتی مقاصد کے لیئے ویب سائٹ کا حوالہ دے کر نشر کرنے کی اجازت ہے.
    ویب سائٹ میں شامل مواد کے حقوق Creative Commons license CC-BY-NC کے تحت محفوظ ہیں
    شبکۃ المدارس الاسلامیۃ 2010 - 2024